عالمی بینک رینکنگ میں اضافہ پاکستان کیلئے بڑی کامیابی ہے: وزیراعظم

اسلام آباد:  وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ ملکی وغیر ملکی سرمایہ کاروں کوسہولیات دینا ترجیح ہے، روپے کی قدر مستحکم ہوگئی ہے۔ عالمی بینک رینکنگ میں اضافہ پاکستان کیلئے بڑی کامیابی ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے معاشی ٹیم کا اجلاس کے دوران کیا، اجلاس میں وفاقی وزراء خسرو بختیار، علی زیدی,عمر ایوب، حماد اظہر شریک ہوئے، اجلاس میں مشیر خزانہ حفیظ شیخ،عبدالرزاق داؤد،عشرت حسین بھی موجود تھے، فردوس عاشق اعوان، یوسف بیگ مرزا، شوکت ترین، شبر زیدی سمیت اور دیگر نے بھی شرکت کی۔

اس موقع پر عمران خان نے عالمی بینک رینکنگ میں اضافے پر معاشی ٹیم کو مبارکباد دی، یہ پاکستان کے لیے بڑی کامیابی ہے۔ معاشی ٹیم کے ساتھ متواتر اجلاس کا مقصد معیشت کے پہیے کو مزید تیز کرنا ہے۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ معاشی اعشاریے بہتری کی طرف جا رہے ہیں، تعمیرات اور چھوٹے کاروبار کو ترویج دینا اب معاشی ٹیم کا مشن ہونا چاہیے تاکہ عوام کو روزگار کے مواقع ملیں اور معیشت کا پہیہ چلے، بینکنگ کورٹس میں کل 46,940 کیسز زیر التوا ہیں۔

وزیر اعظم کو بریفنگ دی گئی، بریفنگ میں بتایا گیا کہ مقدمات کے حل کے لیے قوانین میں اصلاحات کی ضرورت ہے، اسمیڈا کے لیے ایک متحرک اورماہرافراد پر مشتمل بورڈ آف گورنرز قائم کیا جا رہا ہے۔ اسمیڈا کے سی ای او کی تعیناتی دسمبر تک ہو جائے گی، 3 سالہ سٹریٹجی بھی منظور کی جائے گی۔

وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ ملکی وغیر ملکی سرمایہ کاروں کوسہولیات دینا ترجیح ہے، روپے کی قدر مستحکم ہوگئی ہے، سٹاک مارکیٹ کے اعشاریے اوپر جا رہے ہیں۔ بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کے لیے ترسیلات میں آسانیاں پیدا کی جائیں، ایم نائن پر ایکسل لوڈ کی عملداری ایک سال کے لئے موخر کر دی ہے، یہ فیصلہ تاجر برادری کی درخواست پر لیا گیا۔

متعلقہ خبریں