نیب نے عدالتی فیصلے کی دھجیاں اڑائیں، ہر فورم پر چیلنج کریں گے: حمزہ

لاہور: مسلم لیگ ن کے رہنما حمزہ شہباز نیب چھاپے پر اپنے ردعمل میں کہا ہے کہ نیب نے ہائیکورٹ کے فیصلے کی دھجیاں اڑائی ہیں، وہ نیب کے آج کے اقدام کو ہر فورم پر چیلنج کریں گے۔ 

یاد رہے کہ قومی احتساب بیورو (نیب) کی ٹیم نے حمزہ شہباز کی گرفتاری کے لیے آج شہباز شریف کی رہائشگاہ پر چھاپہ مارا تھا لیکن اس دوران کوئی گرفتاری عمل میں نہیں آئی۔

بعد ازاں نیب نے اپنے بیان میں کہا کہ نیب لاہور کی ٹیم آمدن سے زائد اثاثہ جات اور مبینہ منی لانڈرنگ کے کیس میں ٹھوس شواہد کی بنیاد حمزہ شہباز کی گرفتاری کے لیے گئی لیکن انہیں رزدوکوب کیا گیا اور جان سے مارنے کی دھمکیاں دی گئیں۔

نیب چھاپے کے بعد حمزہ شہباز نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ نیب ٹیم نے چادر اور چار دیواری کا تقدس پامال کیا گیا اور ایسا لگا جیسے ہم دہشتگرد ہیں۔

انہوں نے کہا کہ جب بھی انہیں نوٹس ہوا وہ تمام تحفظات کے باوجود پیش ہوئے۔ ‘پاکستانیوں کوبتانا چاہتا ہوں کہ میری بیٹی زندگی موت کی کشمکش میں تھی ،کیا قیامت ٹوٹ پڑی جو میرے گھر پر دھاوا بولا گیا۔

انہوں نے کہا کہ آج کے اقدام کو ہر فورم پر چیلنج کریں گے لیکن حکومت نہیں گرائیں گے کیونکہ ہم انہیں سیاسی شہید نہیں بننے دیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ کل اسلامی نظریاتی کونسل نےبھی کہا ہےکہ آپ لوگوں کی تضحیک کرتے ہیں۔

حمزہ شہباز نے کہا کہ پشاورمیٹرو میں اربوں کی کرپشن کا پتہ چلتا ہے لیکن کرپشن کرنےوالےدندناتے پھرتے ہیں،مگر گرفتاری ہوتی ہے تو نوازشریف، شہبازشریف، مریم نواز اورحمزہ شہبازکی ہوتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ نیب کی شرمناک حرکت کےبعد کسی کی عزت محفوظ نہیں رہے گی،عمران نیازی چور ڈاکو ڈھونڈنے ہیں تو اپنی کابینہ میں ڈھونڈو۔

حمزہ شہباز نے کہا کہ نیب نےآج ہائیکورٹ کے فیصلے کی دھجیاں اڑائی ہیں ، دھکے اور بدتمیزی کرنے والے وہ ہیں جو بغیر نوٹس کے دیوار پھلانگ کر آئے، آٹھ مہینے ہو گئے چور ڈاکو کے نعرے لگاتے لیکن وہ کچھ ثابت نہیں کر سکے۔