مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کی فائرنگ سے 2 کشمیری طلبہ شہید

 سری نگر: مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کی ریاستی دہشت گردی میں 2 کشمیری نوجوان شہید ہوگئے۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق بھارتی فوج نے مقبوضہ کشمیر کے ضلع شوپیاں میں نام نہاد سرچ آپریشن کے دوران چادر اور چار دیواری کے تقدس کو پامال کرتے ہوئے گھر گھر تلاشی لی اور اس دوران فائرنگ کر کے 2 کشمیری طلبا کو شہید کردیا۔

شہید ہونے والے نوجوانوں کی شناخت راحیل راشد اور بلال احمد کے نام سے ہوئی ہے، راحیل ماسٹر آف ٹیکنالوجی کا طالب علم تھا جب کہ دوسرا نوجوان بھی طالب علم تھا۔ نوجوانوں کی شہادت پر علاقہ مکینوں نے بھر پور احتجاج کیا۔

دوسری جانب ضلع بڈگام میں بھارتی سیکیورٹی فورسز نے گھر گھر تلاشی کے دوران 5 نوجوانوں کو حراست میں لیکر نامعلوم مقام پر منتقل کردیا جب کہ بھارت کی نیشنل انویسٹی گیشن ایجنسی نے ضلع پلوامہ میں ایک نوجوان کو گرفتار کیا۔

حریت رہنماؤں نے ضلع شوپیاں میں نوجوانوں کی شہادت اور ضلع بڈگام میں بلاجواز گرفتاریوں کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ بھارتی ظلم و جبر نہتے کشمیریوں کو جدوجہد آزادی سے روک نہیں سکتا اور ان مظالم سے بھارت کا مکروہ چہرہ پوری دنیا میں بے نقاب ہوگیا ہے۔