قرۃ العین بلوچ کی حقوق مانگنے والی خواتین پر تنقید سے نئی بحث چھڑ گئی

پاکستان کی معروف گلوکارہ قرۃالعین بلوچ نے حقوق مانگنے والی خواتین کو تنقید کا نشانہ بنایا جس  کے بعد سوشل میڈیا پر ایک نئی بحث کا سلسلہ شروع ہوگیا۔

عورت مارچ کے متنازع نعرے ’میرا جسم میری مرضی‘ کو لے کر ایک نا ختم ہونے والی بحث کا سلسلہ تا حال نہیں تھم سکا۔

جہاں متعدد لوگوں کی جانب سے عورت مارچ اور اس دن خواتین کی جانب سے اٹھائے جانے والے پلے کارڈز کی حمایت کی جارہی ہے تو وہیں بہت سے لوگ اس کے خلاف بھی ہیں۔

اس حوالے سے مختلف شوبز شخصیات کی جانب سے ملے جلے انداز میں اپنے اپنے خیالات کا اظہار کرنے کا سلسلہ بھی جاری ہے۔

’وہ ہم سفر تھا‘ گانے سے شہرت حاصل کرنی والی گلوکارہ قرۃ العین بلوچ نے بھی اپنے خیالات کا اظہار کیا جس کے بعد انہیں بھی تنقید کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

قرۃ العین بلوچ نے ٹوئٹر پر حقوق مانگنے کے لیے آواز بلند کرنے والی خواتین پر تنقید کی۔

Quratulain Balouch

@Quratulainb

Real feminist gets down to work and wastes no time shouting for her “rights”

3,719 people are talking about this

گلوکارہ نے ٹوئٹ میں لکھا کہ ’اصل فیمینسٹ کام کرتی ہیں، اپنے حقوق مانگنے کے لیے چیخ و پکار مچانے میں وقت ضائع نہیں کرتیں‘۔

قرۃالعین بلوچ کے اس ٹوئٹ پر ایک نئی بحث چھڑ گئی اور لوگوں کی جانب سے انہیں آڑے ہاتھ لیا گیا۔

Quratulain Balouch

@Quratulainb

Real feminist gets down to work and wastes no time shouting for her “rights”

Nida Kirmani@nidkirm

Well that’s disappointing!

See Nida Kirmani’s other Tweets

ندا کرمانی نامی صارف نے قرۃ العین بلوچ کے بیان کو مایوسی قرار دیا۔

Quratulain Balouch

@Quratulainb

Real feminist gets down to work and wastes no time shouting for her “rights”

Hina Tabassum@KhatriHina

You’re able to tweet that only because someone once shouted for that right!

See Hina Tabassum’s other Tweets

حنا تبسم نے کہا کہ ’آج آپ جو یہ ٹوئٹ کرنے کے قابل ہیں وہ صرف ان لوگوں کی وجہ سے ہے جنہوں نے اس حق کے لیے آواز اٹھائی تھی۔

Quratulain Balouch

@Quratulainb

Real feminist gets down to work and wastes no time shouting for her “rights”

Gomz ?@KomzHolmes

…didn’t expect this from you k

See Gomz ?‘s other Tweets

ایک اور صارف کا کہنا تھا کہ ’مجھے آپ سے یہ امید نہیں تھی‘۔

Quratulain Balouch

@Quratulainb

Real feminist gets down to work and wastes no time shouting for her “rights”

Huma Amir Akbar@HumaAmirAkbar

Girl don’t embarrass yourself! Do some research and come back.

See Huma Amir Akbar’s other Tweets

ہما عامر نامی صارف نے کہا کہ’ اپنے آپ کو شرمندہ مت کریں، پہلے تھوڑی تحقیق کریں پھر آئیں‘۔