کورونا کا مقابلہ کر سکتے ہیں وفاقی حکومت اپنی سوچ میں تبدیلی لائے، بلاول

 کراچی: پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا کہنا ہے کہ پاکستان اس بیماری کا مقابلہ کر سکتا ہے اور اس کے لیے وفاقی حکومت اپنی سوچ میں تھوڑی سی تبدیلی لائے۔

کراچی میں پریس کانفرنس کے دوران بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ اللہ جب امتحان لیتا ہے تو اسے برداشت کرنے کی ہمت بھی دیتا ہے، کورونا وائرس سے نمٹنے کے لیے کوششیں کررہے ہیں، ہمیں اس مشکل وقت میں قوائد اور ہدایات پر عمل کرنا ہے۔ ڈرنے اور خوفزدہ ہونے کی کوئی وجہ نہیں، پاکستان اس بیماری کا مقابلہ کر سکتا ہے، میں جانتا ہوں کہ ہم میں وائرس کا مقابلہ کرنے کی صلاحیت ہے، وفاقی حکومت اپنی سوچ میں تھوڑی سی تبدیلی لے کر آئے۔ وفاق اور صوبوں کو تنقید اور پوائنٹ اسکورنگ کی کوئی ضرورت نہیں۔ حکومت کی ذمہ داری ہے کہ لوگوں کی جانوں اور معیشت کو بچائے، ہمیں دونوں محاذوں پر جنگ لڑنا پڑے گی۔ شہری اس مشکل وقت میں حکومت کا ساتھ دیں۔

چیئرمین پیپلز پارٹی کا کہنا تھا کہ بیرون ممالک سے آئے افراد سے میل جول رکھنے والے افراد میں بھی وائرس پھیلا، ایران سے واپس آنے والے افراد کی فہرست ایف آئی اے سے نکلوائی،ہم نے تفتان قرنطینہ سے آنے والوں کو سب سے الگ تھلگ رکھا۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ وائرس کی تشخیص کے لیے زیادہ ٹیسٹنگ کی اپروچ اپنائی جائے، سندھ حکومت نے 10 ہزار ٹیسٹنگ کٹس کا بندوبست کیا ہے، ایکسپو سینٹر کراچی میں ایک بڑا فیلڈ اسپتال بنایا جائے گا، اگر ہمیں اگلے 15 دن گھروں میں رہنا پڑا تو ہم ڈیلی ویجز پر کام کرنے والوں کو کھانا پہنچائیں گے۔ ہمیں سیلف آئسولیشن پر زور دینا ہے، ارکان اسمبلی اپنے حلقوں میں جا کر بیٹھیں اور لوگوں کو آگہی دیں۔