ملک بھر میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد 1252 تک جا پہنچی

اسلام آباد: پاکستان میں کورونا وائرس کے مزید 73 کیسز سامنے آنے کے بعد متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد 1252 تک جا پہنچی ہے۔ پنجاب میں ایک اور ہلاکت کے بعد ملک بھر میں ہلاکتوں کی تعداد 9 ہوگئی۔

سندھ میں 440، پنجاب میں 414، خیبر پختونخوا میں 147، بلوچستان میں 131، گلگت بلتستان میں 91، اسلام آباد میں 27 اور آزاد کشمیر میں کرونا وائرس کے 2 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ ملک بھر میں اب تک وائرس سے متاثر 23 مریض صحت یاب ہوگئے جبکہ 7 کی حالت تشویشناک ہے۔

محکمہ صحت پنجاب کے مطابق کورونا وائرس سے لاہور میں ایک اور ہلاکت ہوئی ہے جس کے بعد صوبے میں اب تک تین افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔ اس سے قبل ایک شخص لاہور اور ایک خاتون راولپنڈی میں جاں بحق ہوچکی ہے۔

گزشتہ روز جاں بحق ہونیوالا 75 سالہ شخص لاہور کے علاقے ٹاؤن شپ کا رہائشی تھا اور اس کا سیمپل اس کے گھر میں ہی لیا گیا تھا۔ معمر شخص پہلے ہی متعدد بیماریوں کا شکار تھا۔

پنجاب میں 414 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوچکی ہے، ڈیرہ غازی خان کے قرنطینہ میں 207، ملتان کے قرنطینہ میں 19، لاہور میں 103، گجرات میں 22، گوجرانوالہ میں 8، جہلم میں 19، راولپنڈی میں 14، ملتان ، فیصل آباد ، منڈی بہائوالدین میں3، 3، میانوالی میں 2 جبکہ نارووال، رحیم یار خان، سرگودھا، اٹک اور بہاولنگر میں ایک، ایک شخص میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی ہے۔

وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد نے دنیا نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے انکشاف کیا کہ پنجاب میں 10 مریضوں کی کوئی ٹریول ہسٹری نہیں اس لئے مریضوں کی تعداد بڑھے گی۔

سندھ کے ترجمان محکمہ صحت کے مطابق صوبے میں کرونا وائرس کے کیسز کی مجموعی تعداد 440 ہوگئی ہے۔ ترجمان نے بتایا کہ نئے کیسز میں سے کراچی میں مزید 7 کیس رپورٹ ہوئے ہیں جس کے بعد صرف کراچی میں کیسز کی تعداد 153 ہوگئی ہے جب کہ حیدرآباد سے بھی ایک کیس رپورٹ ہوا ہے اور ایک مریض دادو میں زیر علاج ہے۔

کراچی، حیدرآباد اور دادو کے مجموعی 156 میں سے 102 افراد میں وائرس مقامی طور پر منتقل ہوا۔ جبکہ تفتان سے سکھر کے قرنطینہ مرکز منتقل کیے گئے زائرین میں سے 265 افراد میں کورونا کی تشخیص ہوچکی ہے۔

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں کورونا کے مزید 5 کیسز سامنے آئے ہیں جو سرکاری پورٹل پر رپورٹ کیے گئے ہیں جس کے بعد اسلام آباد میں مجموعی کیسز کی تعداد 25 ہوگئی ہے۔
کورونا وائرس کے خطرات کے باعث اسلام آباد میں شہزاد ٹاؤن اور رمشا کالونی میں ایک، ایک کورونا وائرس کا کیس سامنے آنے کے بعد دونوں علاقوں کو سیل کردیا گیا۔

جبکہ سرائے عالمگیر میں ایک ہی خاندان کے 6 افراد میں کورونا کی تصدیق ہوگئی، جس کے بعد پورے گاؤں کو سیل کر دیا گیا۔ اسسٹنٹ کمشنر کا کہنا ہے کہ سپین سے آئے شہری میں کوروناوائرس ٹیسٹ مثبت آیا۔ پولیس اور پاک آرمی نے گاؤں کا کنٹرول سنبھال لیا ہے۔