امریکا میں سیاہ فام کے قتل کے خلاف احتجاج جاری ، پولیس اور مظاہرین میں تصادم

 واشنگٹن: امریکا میں سیاہ فام شخص جارج فلائیڈ کے قتل کے ایک ہفتے بعد بھی مشتعل مظاہرے  جاری ہیں اور احتجاج کا سلسلہ یورپ تک وسیع ہوگیا ہے۔

عالمی خبر رساں ادارے کے  مطابق پورا امریکا مشتعل مظاہروں کی لپیٹ میں ہے تاہم مقتول جارج فلائیڈ کے اہلخانہ نے مظاہرین سے پرامن رہنے کی اپیل کی ہے۔امریکا میں شہر شہر احتجاج  ہورہے ہیں اور سفید فام پولیس اہل کار کے ہاتھوں سیاہ فام شخص کے قتل پر مظاہرے پورے ملک میں پھیل گئے ہیں۔ مظاہرین نے مختلف شہروں میں ریلیاں نکالیں جنھیں منتشر کرنے کے لیے  پولیس نے  جب طاقت کا استعمال کیا تو جھڑپیں شروع ہو گئیں۔پولیس کی  جانب  سے آنسو گیس اور  ربڑ کی گولیوں کے استعمال پر مظاہرین  مشتعل ہوگئے اور درجنوں گاڑیوں کو آگ لگا دی۔ مختلف شہروں میں پولیس پر فائرنگ بھی کی گئی۔