مقبوضہ وادی میں مظالم کا سلسلہ جاری، امام مسجد سمیت 8 کشمیری نوجوان شہید

سرینگر: مقبوضہ وادی میں کشمیری نوجوان مسلسل ریاستی جبر وتشدد اور مظالم کا نشانہ بن رہے ہیں۔ دو دن میں امام مسجد سمیت 8 نوجوان شہید کر دیے گئے۔ بھارت کی ظالمانہ کارروائیوں کے خلاف کشمیریوں نے بھرپور احتجاج کیا۔

تفصیل کے مطابق مقبوضہ وادی میں بھارت کا ظلم تمام حدیں پار کر چکا ہے۔ کئی اضلاع میں غاصب فوج نے سرچ آپریشن کی آڑ میں نوجوانوں کو نشانہ بنایا۔

ضلع شوپیاں میں 5 اور پامپور میں 3 کشمیری نوجوانوں کو شہید کیا گیا۔ پامپور کے علاقے میں بھارتی فوج مسجد میں داخل ہو گئی۔ دو نوجوانوں کو مسجد ہی میں شہید کر دیا گیا۔

بھارتی فوج کی ظالمانہ کارروائی کے خلاف کشمیریوں نے احتجاج کیا۔ بھارتی فورسز نے مظاہرین پر آنسو گیس کے شیل پھینکے اور پیلٹ گن کے کارتوس چلائے جس سے متعدد افراد زخمی ہو گئے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق غاصب بھارتی فوج نے مقبوضہ کشمیر کے ضلع اننت ناگ اسلام آباد، کلگام، کپواڑہ، بارہ مولااور بانڈی پورہ میں بھی سرچ آپریشن کیے۔