گوگل کا صارفین کی جمع کردہ معلومات خاص مدت کے بعد حذف کرنے کا فیصلہ

سلیکان ویلی: گوگل اپنی ڈیفالٹ سیٹنگز میں تبدیلیاں لا رہا ہے جس کے بعد صارفین کا جمع کردہ ڈیٹا ایک خاص مددت کے بعد از خود حذف کردیا جائے گا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق ان تبدیلیوں کے بعد ویب سائٹ پرکی گئی سرچ اور پیجز ، لوکیشن ڈیٹا وغیرہ 18 ماہ بعد حذف(ڈیلیٹ) کردیا جائے گا۔ اس کے علاوہ یوٹیوب ہسٹری ، دیکھے گئے کلپ اور ان کی مدت کی معلومات بھی 36 ماہ میں حذف کردی جائیں گی۔ ان تبدیلیوں کا اطلاق نئے اکاؤنٹس پر ہوگا جب کہ پہلے سے موجود صارفین کو تبدیلیوں سے متعلق آگاہ کیا جائے گا۔

یہ اعلان گوگل اور دیگر بڑی کمپنیوں کی جانب سے ڈیٹا کولیکشن کی کوششوں اور معلومات کے تحفظ کو یقینی بنانے کے  حوالے سے کیے جانے والے اقدامات کے تناظر میں سامنے آیا ہے۔

واضح رہے کہ اس سے قبل گوگل نے مئی 2019 میں صارفین کو استعمال کا ریکارڈ یا لوگز ختم کرنے پر مجبور کرنے کے لیے  آٹو ڈیلیٹ کا طریقہ متعارف کروایا تھا تاہم اس وقت اسے صارف کے انتخاب پر چھوڑا گیا تھا۔ گوگل صارف کے لیے  سرچ اور اشتہارات کی تجویز کرنے کے لیے اس معلومات کا استعمال کرتا ہے۔

گوگل کے پروڈکٹ مینیجر ڈیوڈ مونسیز کا کہنا تھا کہ یہ معلومات ہماری پراڈکٹس کے لیے مددگار ہے تاہم معلومات کا حجم کم سے کم کرنا ہماری پرائویسی پالیسی میں شمال ہے اور ہم  غیر معینہ مدت تک گوگل پر صارفین کی سرگرمیوں کا ریکارڈ ان سے بغیر پوچھے محفوظ نہیں رکھیں گے۔