آسٹریلیا کی خاتون امپائر مینز او ڈی آئی کی امپائرنگ کرکے تاریخ رقم کریں گی

وندھوئک: آسٹریلیا کی خاتون امپائر کلیئر اینتونی پولوسک پہلی مرتبہ مینز ون ڈے انٹرنیشنل کرکٹ میچ کی امپائرنگ کرنے والی پہلی خاتون امپائر کا اعزاز حاصل کریں گی۔

آئی سی سی کے مطابق کلیئر پولوسک نمیبیا میں منعقد ورلڈ کرکٹ لیگ ڈویژن 2 کے فائنل میں فیلڈ امپائر کی خدمات انجام دیں گی جس میں عمان اور نمیبیا کی ٹیمیں آمنے سامنے ہوں گی۔

پولوسک کا مین او ڈی آئی میں امپائرنگ پر کہنا تھا کہ ’مجھے بہت خوشی ہے کہ میں مین او ڈی آئی کی پہلی خاتون امپائر ہوں گی‘۔

انہوں نے کہا ایسی کوئی وجہ نہیں کہ خواتین کرکٹ میں امپائر نہیں بن سکتیں بلکہ یہ بہت اہم ہے کہ خواتین امپائرز کو مواقع فراہم کیے جائیں تاکہ صنفی تفریق ختم ہو اور دیگر خواتین کو آگے آنے کا موقع ملے۔

ICC

@ICC

Australia’s Claire Polosak will make history today at !

63 people are talking about this

کلیئر پولوسک کا کہنا تھا کہ میرا امپائر بننا پوری ٹیم کی محنت ہے جس کے لیے میں ان تمام امپائرز کا شکریہ ادا کرنا چاہوں گی جن کے ساتھ میں نے کام کیا اس کے علاوہ مقامی کرکٹ ایسوسی ایشن، این ایس کرکٹ امپائرز اور اسکوررز ، آسٹریلوی کرکٹ ایسوسی ایشن سمیت دوستوں اور اہل خانہ کا شکریہ ادا کرتی ہوں جنہوں نے میرا ساتھ دیا۔

کلیئر پولوسک نے امپائرنگ کی ذمہ داریاں 2017 سے انجام دینا شروع کیں، انہوں نے سب سے پہلے ویمن ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل کرکٹ کی امپائرنگ کی۔

2018 میں انہوں نے پہلی مرتبہ انگلینڈ میں کرکٹ ٹیم کے افتتاحی میچ میں فیلڈ امپائرنگ کی جس میں انگلینڈ اور آسٹریلیا مد مقابل تھے۔