کرپشن اور ترقی کا سفر ایک ساتھ نہیں چل سکتا: وزیراعظم

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہےکہ کرپشن کا خاتمہ حکومت کی اولین ترجیح ہے کیونکہ کرپشن اور ترقی کا سفر ایک ساتھ نہیں چل سکتا۔

وزیراعظم عمران خان سے ڈائریکٹر جنرل اینٹی کرپشن اعجا زحسین شاہ نے ملاقات کی اور اس موقع پر وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار بھی موجود تھے۔

وزیراعظم نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کرپشن کا خاتمہ حکومت کی اولین ترجیح ہے، کرپشن نے نہ صرف ملکی معیشت بلکہ اداروں کو تباہ کیا اور عام آدمی کی زندگی کو بھی متاثر کیا۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ کرپشن اور ترقی کا سفر ایک ساتھ نہیں چل سکتا، بدعنوان عناصر کے خلاف بلاتفریق کارروائی کو ایک مشن سمجھ کر پورا کیا جائے، حکومت اس ضمن میں ہر ممکنہ تعاون فراہم کرے گی۔

اوکاڑہ میں ہاؤسنگ اسکیم کا افتتاح

دوسری جانب وزیراعظم نے اوکاڑہ میں نیا پاکستان ہاؤسنگ اسکیم کا افتتاح کردیا۔

اس موقع پر رینالہ خورد میں افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ ہمیں پانچ سال میں 50 لاکھ گھر بنانے ہیں، میاں محمودالرشید کہتے ہیں یہ 50 لاکھ گھر بنانامشکل ہے، اگر مشکل نہ ہوتا تو پچھلی حکومت یہ کام کرچکی ہوتی۔

انہوں نے کہا کہ معاشرہ کمزور لوگوں کی فکر کرتاہے، ریاست غریبوں کو چھت فراہم کرنےکی ذمےداری لے اور جب ریاست کمزور طبقےکی ذمے داری لیتی ہے تو اللہ اس کی مدد کرتا ہے، مدینےکی ریاست دنیا کی پہلی فلاحی ریاست تھی جہاں  جانوروں کا بھی خیال رکھا جاتا تھا۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ اس وقت پاکستان کے معاشی طور پر سب سے مشکل حالات ہیں، ہم نے تب یہ ذمہ داری لی کہ اس طبقے کے لیے گھر بنائیں گے جو گھر نہیں خرید سکتا، اس کے لیے ہم قانون بدلیں گے اور بینکوں کو تیار کریں گے، ہاؤسنگ سارے پاکستان میں شروع کررہے ہیں، پچاس لاکھ گھر پرائیوٹ سیکٹر بنائے گا حکومت صرف مدد کرے گی، اس میں نوجوانوں کو زبردست موقع ملے گا کہ وہ چھوٹی کنسٹریکشن کمپنیاں بنائیں۔

عمران خان نے مزید کہا کہ شہروں میں اب تک کچی آبادیاں ہیں اور لوگ برے حالات میں رہتے ہیں، اس کے لیے زبردست پروگرام لارہے ہیں، کچی آبادیوں کے لیے فلیٹس تعمیر کرنے کا فیصلہ کیا ہے تاکہ لوگ آرام سے رہ سکیں ،اس کے لیے چائنا سے مدد لیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ جو لوگ کہتے ہیں 50 لاکھ گھر ناممکن ہے وہ دیکھیں گے یہ کام ہر سال تیز ہوگا، شروع میں ہمیں دیر لگے گی لیکن پھر جلدی ہوگا، اس اسکیم سے ان لوگوں کو گھر بنانے کا موقع ملے گا جو تنخواہ میں گھر بنانے کا سوچ نہیں سکتے تھے، میرا خواب ہے ہر پاکستانی کے سرپر چھت ہو۔