بھارت کشمیر میں بنیادی حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں کر رہا ہے، ہیومن رائٹس واچ

لاہور: ہیومن رائٹس واچ نے مودی سرکارکو آڑے ہاتھوں لے لیا۔ عالمی تنظیم کا کہنا ہے کہ مقبوضہ جموں و کشمیرمیں اب بھی ظلم وبربریت کا سلسلہ جاری ہے، بھارت غیر قانونی طور پر آزادی اظہار رائے اور دیگر بنیادی حقوق کی خلاف ورزیاں کررہا ہے۔

خصوصی حیثیت کے خاتمے کے بعد بھی ظلم وبربریت کا سلسلہ تھم نہ سکا، ہیومن رائٹس واچ نے مودی سرکار پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ بھارت غیر قانونی طور پر مقبوضہ وادی میں آزادی اظہار رائے اور دیگر بنیادی حقوق کو محدود کر رہا ہے۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق عالمی حقوق کے نگراں ادارے کا کہنا ہے کہ مودی سرکار کی جابرانہ پالیسیوں اور سکیورٹی فورسز کی مبینہ زیادتیوں کی تحقیقات اور مقدمے چلانے میں ناکامی نے کشمیریوں میں عدم تحفظ میں اضافہ کیا ہے۔ بھارتی حکام نے کئی ممتاز کشمیریوں کو بغیر وجہ بتائے بیرون ملک سفر کرنے سے بھی روک دیا ہے۔

عالمی ادارے نے وادی میں سکیورٹی فورسز کے ہاتھوں صحافیوں کو ہراساں کرنے، دہشت گردی کے الزامات میں چھاپے اور من مانی گرفتاریوں پر بھی شدید تشویش کا اظہار کیا ہے۔
 

متعلقہ خبریں