رانا ثنا اللہ کیخلاف کیس جھوٹا، پارٹی ان کیساتھ کھڑی ہے: شہباز شریف

لاہور:  پاکستان مسلم لیگ (ن) کے صدر میاں شہباز شریف نے کہا ہے کہ سب جانتے ہیں کہ رانا ثنا اللہ کیخلاف کیس بے بنیاد اور جھوٹا ہے، ساری پارٹی اس وقت ان کیساتھ کھڑی ہے۔

رانا ثنا اللہ کے اہلخانہ سے ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو میں شہباز شریف نے کہا کہ عمران خان نے اقتدار سنبھالتے ہی اپوزیشن کو چور اور ڈاکو کہنا شروع کر دیا، اگر وہ ان گیارہ ماہ میں ملکی مسائل حل کرتے تو حالات مختلف ہوتے۔ آج پاکستان میں معاشی تباہی اور بربادی کے بعد کوئی سرمایہ کاری کے لیے تیار نہیں ہے، آئی ایم ایف کے کہنے پر روپے کی قدر کم کی گئی۔

انہوں نے الزام عائد کیا کہ علیمہ خان پیسہ بیرون ملک لے کر گئیں۔ پیسہ ملک سے باہر لے جانا جرم ہے یا ملک کے اندر قانونی طریقے سے لانا جرم ہے؟

ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے شہباز شریف کا کہنا تھا کہ میرا بڑا بھائی اور بیٹا گرفتار ہے، محتاط کس بات پر ہوں؟ سارا ایجنڈا فسطایت ہی (ن) لیگ کیخلاف ہے۔ رہبر کمیٹی میں احتجاج کا لائحہ عمل طے کیا جائے گا۔

اپوزیشن لیڈر نے الزام عائد کیا کہ رانا ثنا اللہ کو جوڈیشل ریمانڈ پر پینے کا پانی اور کھانا بھی نہیں دیا جا رہا۔ ایسا تو دشمن کیساتھ بھی نہیں کیا جاتا، انہوں نے کوئی قتل نہیں کیا، انھیں فوری طبی سہولیات دی جائیں۔ اگر تاخیر ہوئی تو نیازی صاحب مجرمانہ غفلت کے ذمہ دار ہونگے۔

ان کا کہنا تھا کہ رانا ثنا اللہ کی اہلیہ نے بتایا ہے کہ ان کے شوہر کی بینائی بھی متاثر ہوئی ہے۔ عام قیدی کو بھی بنیادی سہولتوں سے محروم نہیں کیا جا سکتا۔ عمران خان اوچھے ہتھکنڈوں پر اتر آئے ہیں۔

اس موقع پر میڈیا سے گفتگو میں شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ میڈیا پر ہر شخص کہہ رہا ہے کہ رانا ثنا اللہ پر یہ کیس جھوٹا ہے۔ لیگی رہنما نے سابق صدور ضیا الحق اور پرویز مشرف کی آمریت کا مقابلہ کیا، وہ آج عمران خان کی آمریت کا مقابلہ کر رہے ہیں۔