پاکستانی نژاد ساجد جاوید برطانیہ میں وزیر خزانہ کے عہدے پر فائز

لندن : نومنتخب برطانوی وزیراعظم بورس جانسن نے اپنی کابینہ تشکیل دیتے ہوئے پاکستانی نژاد رکن پارلیمنٹ ساجد جاوید کو وزیر خزانہ کے عہدے پر فائز کردیا۔

پاکستانی نژاد ساجد جاوید تھریسامے کے متبادل برطانوی وزیراعظم کی دوڑ میں شامل

ساجد جاوید برطانوی وزیر خزانہ کےعہدہ ہر فائز ہونے والے پہلے غیر سفید فام رکن پارلیمنٹ ہیں۔

وزیر خزانہ کا عہدہ برطانیہ میں وزیر اعظم کے بعد اہم ترین تصور کیا جاتا ہے، ساجد جاوید اس سےقبل ٹریزا مےکی حکومت میں وزیر داخلہ تھے۔

Sajid Javid

@sajidjavid
Deeply honoured to be appointed Chancellor by PM @BorisJohnson. Looking forward to working with @hmtreasury to prepare for leaving the EU, unifying our country and priming our economy for the incredible opportunities that lie ahead.

8,552
10:55 PM – Jul 24, 2019
Twitter Ads info and privacy
2,333 people are talking about this
وزیر خزانہ کا منصب ملنے کے بعد ساجد جاوید نے کہا کہ ‘یہ عہدہ میرے لیے اعزاز ہے، برطانوی وزارت خزانہ میں کام کرنے کیلئے پرعزم ہوں’۔

انہوں نے کہا کہ بطور وزیر خزانہ یورپی یونین سے علیحدگی کی تیاری، قوم کو متحد کرنا اور معیشت کو اولیت بخش کر مواقع پیدا کرنا اہم ذمہ داریاں ہوں گی۔

بورس جانسن برطانوی وزیراعظم بن گئے، 31 اکتوبر کو یورپی یونین سے علیحدگی کا اعلان

خیال رہے کہ برطانوی حکمران جماعت کنزرویٹو پارٹی کے سربراہ بورس جانسن ملکہ کی منظوری کے بعد برطانیہ کے نئے وزیراعظم بن گئے ہیں۔

وزارت عظمیٰ کا عہدہ سنبھالتے ہی بورس جانسن نے اس بات کا اعلان کیا کہ چاہے کچھ بھی ہو، برطانیہ 31 اکتوبر کو یورپی یونین سے علیحدہ ہوجائے گا۔

وزیراعظم بننے کے بعد 10 ڈاؤننگ اسٹریٹ کے باہر خطاب کرتے ہوئے بورس جانسن نے کہا کہ ‘میں برطانیہ کو بہتر مستقبل کے لیے تبدیل کرنا چاہتا ہوں، اب کوئی اگر مگر نہیں، برطانیہ 31 اکتوبر کو یورپی یونین سے علیحدہ ہوجائے گا’۔

متعلقہ خبریں