اسپورٹس ڈپلومیسی میں اہم پیش رفت، بھارت ’ڈیوس کپ‘ کیلئے ٹیم پاکستان بھیجنے پر رضامند

اسلام آباد: پاک بھارت اسپورٹس ڈپلومیسی میں اہم پیش رفت سامنے آئی ہے کہ بھارت نے ڈیوس کپ ٹائی کے لیے اپنی ٹیم پاکستان بھیجنے پر رضامندی ظاہر کر دی ہے۔

1964کے بعد پہلی بار پاکستان ڈیوس کپ ٹائی کی میزبانی کر رہا ہے جس کے لیے بھارت کی شرکت مشکوک تھی۔

اس حوالے سے اب اہم پیش رفت سامنے آئی ہے کہ بھارت کی ٹینس ایسوسی ایشن نے ڈیوس کپ ٹائی کے لیے پاکستان آنے پر رضا مندی ظاہر کر دی ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ بھارتی ٹینس ایسوسی ایشن نے ڈیوس کپ کے لیے 14 رکنی ٹیم اور آفیشلز کی لسٹ پاکستان کو ارسال کر دی ہے جس میں انڈین ٹینس ایسوسی ایشن کے سابق صدر انیل کھنہ بھی شامل ہیں۔

ذرائع کے کا کہنا ہے کہ مہیش بھوپاتی بھارتی ٹینس ٹیم کے نان پلیئنگ کپتان ہوں گے جب کہ ٹینس عالمی رینکنگ میں 89ویں پوزیشن پر موجود پر جنیش پربھاکارن بھی انڈین اسکواڈ میں شامل ہیں۔

اس کے علاوہ روہن بھوپنا، رام کمار، دیوج شرن بھی بھارتی ٹینس ٹیم میں شامل ہوں گے۔

ذرائع کے مطابق ڈیوس کپ ٹائی میں دونوں روایتی حریف 14 اور 15 ستمبر کو اسلام آباد میں مد مقابل ہوں گے۔

متعلقہ خبریں